تازہ ترین

کالعدم تحریک طالبان پاکستان کے سابقہ نائب امیر طویل مدت کے بعد بگرام جیل سے رہا ہوگئے ـ

کالعدم تحریک طالبان پاکستان کے سابقہ امیر طویل مدت کے بعد بگرام جیل سے رہا ہوگئے ـ

کابل: ذرائع کے مطابق کالعدم تحریک طالبان پاکستان کے سابقہ نائب اور باجوڑ ایجنسی کے امیر مولانا فقیر محمد بگرام کی جیل سے رہا ہوگئے ہیں ـ

گزشتہ روز جب کابل کی پلچرخی اور بگرام کی جیلوں کو قیدیوں کیلئے کھولا گیا تو اس میں دیگر ہزاروں قیدیوں سمیت مولانا فقیر محمد بھی شامل تھے ـ اس کے علاوہ بھی تحریک طالبان پاکستان کے ساتھ وابستہ سینکڑوں قیدی رہا ہوگئے ہیں جن کی صحیح تعداد اب تک معلوم نہیں ـ

ایک اندازے کے مطابق ٹی ٹی کے رہائے پانے والے افراد کی تعداد 500 ہے ـ

تحریک طالبان پاکستان نے مولانا فقیر محمد کی رہائی کی تصدیق کی اور امت مسلمہ کو اس کی مبارکباد پیش کی ہے ـ

مولانا فقیر محمد 26 فروری 2013ء کو پاک افغان بارڈر پر اپنے چار ساتھیوں سمیت افغان فورسز کے ہاتھوں گرفتار ہوئے تھے ـ ان کے ساتھ گرفتار شدہ ایک ساتھ شاہد عمر کو حال ہی میں باجوڑ کا گورنر مقرر کیا گیا ہے ـ

طالبان ذرائع کا کہنا ہے کہ مولانا فقیر محمد کالعدم ٹی ٹی پی کے سینئر اراکین میں سے ہیں اور حکیم اللہ محسود کے نائب بھی رہ چکے ہیں، جبکہ مولانا فقیر محمد کے علاوہ سینکڑوں دیگر تحریک طالبان کے ساتھیوں کی رہائے سے ٹی ٹی پی کے افرادی قوت مزید بڑھے گی ـ

ایڈمن کے بارے میں admin

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے