تازہ ترین

طالبان نے افغانستان کے بہت ہی اہم صوبے ننگرہار پر بھی کنٹرول حاصل کرلیا ـ

جلال آباد: (ٹرائبل نیوز) طالبان نے افغانستان کے بہت ہی اہم صوبے ننگرہار پر بھی کنٹرول حاصل کرلیا ہے، طالبان کے ترجمان ذبیح مجاھد نے دعویٰ کیا ہیکہ ننگرہار مکمل طور پر ان کے قبضے میں آچکا ہےـ

ترجمان نے کئی ویڈیوز شیئر کی ہیں جن میں دیکھا جاسکتا ہے کہ طالبان کے مسلح جنگجو صوبہ ننگرہار کے مرکزی شہر جلال آباد میں موجود ہیں ـ

دوسری جانب کابل ننگرہار کا راستہ منقطع ہونے کے باعث مذکورہ صوبے کا گورنر بھی طالبان کے سامنے ہھتیار ڈال چکا ہے، جبکہ افغان پارلیمنٹ کے مشہور ترین رکن فریدون مہمند بھی طالبان کو سرنڈر کر چکا ہے ـ

ذرائع کے مطابق طالبان کا کنٹرول کابل شہر سے صرف چند کلومیٹرز کی دوری پر ہے جہاں کابل ننگرہار کے شاہراہ پر واقع ضلع سروبی پر طالبان نے حملہ کیا ہے جس کی وجہ سے کابل تا ننگرہار شاہراہ بند ہےـ

ننگرہار پچیسواں صوبہ ہے جس کے دارالحکومت پر طالبان نے قبضہ جمالیا ہے ـ اس سے پہلے طالبان بالترتیب نیمروز، جوزجان، سرپل، کندز، تخار، سمنگان، فراه، بغلان، بدخشان، غزنی، ہرات، بادغیس، قندہار، ہلمند، غور، لوگر، ارزگان، زابل، پکتیکا، کونڑ، پکتیا، فاریاب، مزار شریف، لغمان، صوبوں پر کنٹرول حاصل کرچکے ہیں ـ

ایڈمن کے بارے میں admin

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے